نیپرا نے کراچی ميں لوڈشیڈنگ پر کے الیکٹرک کو شوکاز نوٹس جاری کردیا

0
242
k electric
k electric

نیشنل الیکٹرک پاو ریگولیٹری اتھارٹی (نیپرا) نے کراچی ميں لوڈشیڈنگ کے معاملے پر شہر میں بجلی کی تقسیم کار کمپنی کے الیکٹرک کو شوکاز نوٹس جاری کردیا۔

گزشتہ روز چیئرمین نیپرا توصیف ایچ فاروقی کی سربراہی میں اتھارٹی کا اجلاس ہوا تھا جس میں تحقیقاتی ٹیم کی جانب سے کراچی میں لوڈشیڈنگ پررپورٹ پیش کی گئی تھی۔

اب تحقیقاتی ٹیم کی رپورٹ کی روشنی میں نیپرا نے کے الیکٹرک کو شوکاز جاری کردیا ہے۔ نیپرا کے مطابق کے الیکٹرک کے معاملے پر انکوائری کمیٹی نے رپورٹ اتھارٹی کو پیش کی جس  کا جائزہ لینے کے بعد مزید کارروائی کا فیصلہ کیاگیا۔

خیال رہے کہ  نیپرا کی تحقیقاتی ٹیم نے رپورٹ میں  لوڈ شیڈنگ کی مکمل ذمہ داری کراچی میں بجلی کی تقسیم کار کمپنی کے الیکٹرک پر عائد کی ہے۔

رپورٹ میں کہا گیا ہے کہ کے الیکٹرک نے لائسنس کی خلاف ورزی کی، لائسنس کے تحت کے الیکٹرک صارفین کو بجلی فراہمی کی پابند ہے، پاورپلانٹس کو تیل کی عدم دستیابی کے ذمہ دار صارفین نہیں۔

یاد رہے کہ وفاقی حکومت اور گورنر سندھ کی یقین دہانیوں کے باوجود کراچی میں بجلی کی لوڈشیڈنگ کا دورانیہ 12 سے 14 گھنٹے تک ہوگیا ہے جس کے باعث شدید گرمی میں شہریوں کو مشکلات کا سامنا ہے۔

ذرائع کے مطابق شہر میں بجلی کی مجموعی طلب صرف 2500 میگا واٹ اور رسد 1900 میگا واٹ ہے، نجی پاور پلانٹس سے 300 جب کہ نیشنل گرڈ سے 700 میگاواٹ بجلی مل رہی ہے اور اس طرح شہر میں بجلی کی طلب و رسد میں 600 میگاواٹ کا فرق موجود ہے۔

ذرائع کا کہنا ہے کہ شارٹ فال شہر میں دن اور رات کے اوقات میں لوڈشیڈنگ کر کے پورا کیا جا رہا ہے، لوڈشیڈنگ والے علاقوں میں 8 سے 9 گھنٹے بجلی بند کی جا رہی ہے جب کہ مستثنیٰ علاقوں میں تین سے چار گھنٹوں کے لیے بجلی بند کی جا رہی ہے۔

LEAVE A REPLY

Please enter your comment!
Please enter your name here